اگلا صفحہ پچھلا صفحہ

"بجلی کا بحران، عوام پریشان" پر مزید کوریج

وزیراعظم گیلانی کے سخت نوٹس کے بعد لاہور میں لوڈ شیڈنگ 2گھنٹے کم کرکے سٹیل فرنس کے تمام منصوبے 15روز کیلئے بند کر دئیے گئے ‘پیپکو:
لاہور (اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین ۔12 اپریل ۔2010ء) ڈی جی انرجی مینجمنٹ (پیپکو) محمد خالد نے کہا ہے کہ وزیراعظم سید یوسف رضا گیلانی کے سخت نوٹس کے بعد لاہور میں لوڈ شیڈنگ 2گھنٹے کم کرکے سٹیل فرنس کے تمام منصوبے 15روز کیلئے بند کر دئیے گئے ‘ گدو پاور پلانٹ کے تین پلانٹ 15اپریل ‘ حبکوپاور پلانٹ 20اپریل اور کیپکو کے تین پلانٹ 14اپریل کو کام شروع کر دیں گے جس سے مجموعی طور پر 934میگاواٹ بجلی سسٹم میں آ جائے گی۔ وہ گزشتہ روز واپڈا ہاؤس میں پریس کانفرنس سے خطاب کر رہے تھے۔ ڈی جی انرجی مینجمنٹ ( پیپکو) محمد خالد نے کہا کہ اس وقت پیپکو کو 4980میگاواٹ بجلی کی کمی کا سامنا ہے اور 9جون تک چشمہ پاور پلانٹ کام شروع کر دے گا۔ انہوں نے کہا کہ فیصل آباد میں لگائے جانے والے رینٹل پاور پلانٹ نے ٹیسٹ کے طور پر کام شروع کر دیا ہے اور اس سے 150میگاواٹ بجلی حاصل کی جائے گی جو صرف فیصل آباد کے صارفین کو دی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ وزیراعظم سید یوسف رضا گیلانی نے اپنے غیر ملکی دورے کے دوران لاہور میں بجلی کی لوڈ شیڈنگ کے خلاف ہونیوالے احتجاجی مظاہروں کا نوٹس لیا تھا جس کے بعد وفاقی وزیر پانی وبجلی راجہ پرویز اشرف کی ہدایت کے بعد لاہو رمیں بجلی کی لوڈ شیڈنگ مزید دو گھنٹے کم کر دی گئی ہے اور اس کے ساتھ سٹیل فرنس کو بھی 15دن کیلئے فوری طور پر بند کر دیا گیا جس سے تقریباً 240میگاواٹ بجلی کی بچت ہو گی ۔ انہوں نے کہا کہ واپڈا کے تمام سپرنٹنڈنٹس کو ہدایت کی گئی ہے کہ وہ اپنے علاقوں میں تاجروں‘ صنعتکاروں‘ کسانوں سے رابطے کریں تاکہ بجلی کی لوڈ شیڈنگ کے حوالے سے ان کے تحفظات دور کئے جائیں۔

12/04/2010 19:38:42 : وقت اشاعت
پچھلی خبر مركزی صفحہ اگلی خبر
تمام خبریں
یہ صفحہ اپنے احباب کو بھیجئیے
محفوظ کیجئے
پرنٹ کیجئے