اگلا صفحہ پچھلا صفحہ

"بجلی کا بحران، عوام پریشان" پر مزید کوریج

بجلی کا شارٹ فال تین ہزار بارہ میگاواٹ تک پہنچ گیا:
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین ۔14جنوری۔ 2010ء) ملک میں بجلی کا شارٹ فال تین ہزار بارہ میگاواٹ تک پہنچ گیا ہے۔بجلی کی پیداوار سات ہزار پانچ سو سینتالیس میگاواٹ جبکہ مانگ دس ہزار پانچ سو انسٹھ میگاواٹ ہے۔ اسلام آباد میں وزارت پانی وبجلی کے ذرائع کے مطابق ہائیڈرل پاوور جنریشن صرف چارسوتیس میگاواٹ رہ گئی ہے جبکہ جینکوز سے دو ہزار دو سو بارہ اور آئی پی پیز سے چار ہزار نو سو پانچ میگاواٹ بجلی حاصل کی جا رہی ہے۔ پنجاب میں لوڈ شیڈنگ کا دورانیہ سولہ سے بیس گھنٹے تک پہنچ گیا ہے۔جس کی وجہ سے نہ صرف گھریلو صارفین کو مشکلات کا سامنا ہے بلکہ صنعتی سرگرمیاں بھی مفلوج ہوکر رہ گئی ہیں۔ فیسکو اور میپکو کی جانب سے بار بار یقین دہانی کے باوجود صنعتی علاقوں میں لوڈ شیڈنگ کا دورانیہ 16گھنٹے تک جبکہ رہائشی علاقوں میں 20 گھنٹے تک بجلی کی بندش کی جارہی ہے ۔ فیصل آباد میں بجلی کی طویل لوڈ شیڈنگ کی وجہ سے دو لاکھ سے زائد پاور لومز متاثر ہو رہی ہیں جس سے ہزاروں مزدور بے روزگار ہوگئےہیں۔ علاوہ ازیں گیس کی لوڈ شیڈنگ کے باعث پانچ سو سے زائد صنعتی یونٹس متاثر ہورہے ہیں ۔

14/01/2010 16:35:36 : وقت اشاعت
پچھلی خبر مركزی صفحہ اگلی خبر
تمام خبریں
یہ صفحہ اپنے احباب کو بھیجئیے
محفوظ کیجئے
پرنٹ کیجئے