اگلا صفحہ پچھلا صفحہ

"بجلی کا بحران، عوام پریشان" پر مزید کوریج

بجلی کی غیر اعلانیہ اورطویل ترین لوڈشیڈنگ کیخلاف این ایس ایف اورنیپ کی احتجاجی ریلی:
راولاکوٹ(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین ۔22مارچ۔ 2010ء) بجلی کی غیر اعلانیہ اورطویل ترین لوڈشیڈنگ کیخلاف این ایس ایف اورنیپ کی احتجاجی ریلی ،راولاکوٹ سراپااحتجاج بن گیا شہری اورتاجران بھی احتجاج میں شامل۔تفصیلات کے مطابق پیر کو حسین خان شہید پوسٹ گریجویٹ کالج سے نیشنل عوامی پارٹی کے صدر لیاقت حیات کی قیادت میں ایک ریلی نکالی گئی پولیس کی بھاری جمعیت اس ریلی کے ہمراہ تھی ریلی جب شہرداخل ہوئی تو شہری اورتاجر بھی ریلی میں شامل ہوگئے ریلی کے شرکاء بجلی ہماری ہمیں دو، بے گھر ہوئے ہم، روشن ہے اسلام آباد،واپڈامردہ باد فاروق حکومت مردہ باد ،منگلاڈیم کی ملکیت کشمیر کو دو کے نعرے لگاتے مین چوک پہنچے جہاں جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے لیاقت حیات شاہد شارف، اسرارالحق،باسط علی ،عدنان رحمت، عاقب علی،صہیب حمید اوردیگر نے کہاکہ آزاد کشمیر میں لوڈشیڈنگ کا کوئی جوازنہیں آزاد کشمیر میں کوئی صنعتی مراکز یاکارخانے نہیں جن سے بجلی کی لوڈشیڈنگ کے ذریعے بچت ہو ستم ظریفی یہ ہے کہ راولاکوٹ کے ضلع میں دن رات میں بائیس گھنٹے اوسطاً بجلی بندرہتی ہے اس لوڈشیڈنگ سے ماسوائے عوام کو نقصان دینے اور کوئی فائدہ نہیں ہوتا یہاں کاروبار زندگی مفلوج ہوکر رہ گیا ۔

22/03/2010 14:18:15 : وقت اشاعت
پچھلی خبر مركزی صفحہ اگلی خبر
تمام خبریں
یہ صفحہ اپنے احباب کو بھیجئیے
محفوظ کیجئے
پرنٹ کیجئے