اگلا صفحہ پچھلا صفحہ

"بجلی کا بحران، عوام پریشان" پر مزید کوریج

کراچی ہماری لائف لائن ہے‘ وہاں بجلی نہ ہونا خطرناک ہے‘راجہ پرویز اشرف، آندھی اور طوفان سے 500 کے وی لائن میں فالٹ آ گیا تھا جس سے سپلائی میں کمی واقع ہوئی‘قومی اسمبلی میں خطاب:
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔18جون۔2009ء) وفاقی وزیر بجلی وپانی راجہ پرویز اشرف نے کہا ہے کہ کراچی ہماری لائف لائن ہے- وہاں بجلی نہ ہونا خطرناک ہے- گزشتہ روز آندھی اور طوفان سے 500 کے وی لائن میں فالٹ آ گیا جس سے کراچی سرٹ میں مجموعی طور پر 700 میگاواٹ سپلائی میں کمی واقع ہوئی لیکن ہم نے اس پر قابو پا لیا ہے اور کراچی سمیت سندھ کے متعدد شہروں میں بجلی بحال کر دی گئی ہے جمعرات کو نکتہ اعتراض پر جواب دیتے ہوئے راجہ پرویز اشرف نے کہا کہ بجلی کی کمی کو کراچی میں پورا کرنے کیلئے 750 میگاواٹ پیپکو سے ایکسپورٹ کرتے ہیں اور اس نظام کو بہتر بنانے کیلئے جونہی سسٹم شروع ہو گا مزید میگاواٹ جانا شروع ہو جائیں گے انہوں نے کہا کہ کراچی سب سے بڑا صنعتی شہر ہے وہاں پر لوڈ شیڈنگ پر قابو پانا بہت ضروری ہے اس سے قبل وفاقی وزیر بابر غوری نے نکتہ اعتراض پر کہا کہ کراچی اس وقت شدید مشکلات کا شکار ہے کسی بھی جگہ بجلی نہیں ہے لوگوں نے راتیں سڑکوں پر گزار دیں ہسپتالوں میں دوران آپریشن مریض جاں بحق ہو گئے- وہاں قیامت کا سماں ہے انہوں نے کہا کہ حکومت بجلی پر دی گئی سبسڈی ختم کرے اور کراچی میں واپڈا نے بجلی کی جو کٹوتی کی ہے وہ بحال کی جائے ورنہ ہمارا اس بجٹ میں ساتھ چلنا مشکل ہو جائے گا-

18/06/2009 16:23:25 : وقت اشاعت
پچھلی خبر مركزی صفحہ اگلی خبر
تمام خبریں
یہ صفحہ اپنے احباب کو بھیجئیے
محفوظ کیجئے
پرنٹ کیجئے