اگلا صفحہ پچھلا صفحہ

"بجلی کا بحران، عوام پریشان" پر مزید کوریج

ارسا کی ہدایت پر صوبہ پنجاب کو تونسہ بیراج سے 9.1فیصد شیئر دے دیا گیا ،ڈی جی خان کینال میں تین ہزار کیوسک پانی کی فراہمی  مظفر گڑھ ٹی پی لنک کینال بدستور بند  تربیلا ڈیم میں آبی قلت سنگین  تربیلا پاور ہاؤس کے بارہ یونٹ بند بجلی کی پیداوار میں شدید کمی  منگلا ڈیم سے پانی کے اخراج اور بجلی کی پیداوار میں اضافہ  منگلا پاور اسٹیشن کے چھ یونٹوں نے کام شروع کردیا:
کوٹ ادو(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔1اپریل۔2009ء) ارسا کی ہدایت پر صوبہ پنجاب کو تونسہ بیراج سے 9.1فیصد شیئر دے دیا گیا  ڈی جی خان کینال میں تین ہزار کیوسک پانی کی فراہمی۔ مظفر گڑھ ٹی پی لنک کینال بدستور بند  تربیلا ڈیم میں آبی قلت سنگین  تربیلا پاور ہاؤس کے بارہ یونٹ بند بجلی کی پیداوار میں شدید کمی  منگلا ڈیم سے پانی کے اخراج اور بجلی کی پیداوار میں اضافہ  منگلا پاور اسٹیشن کے چھ یونٹوں نے کام شروع کردیا  چشمہ پاور پلانٹ فنی خرابی کے باعث پندرہ روز سے بدستور بند۔ تفصیل کے مطابق ارسا کی ہدایت پر صوبہ پنجاب کو فصل خریف کیلئے دریائے سندھ پر تونسہ بیراج کے مقام سے 9.1فیصد شیئر دے دیا گیا ہے جس کے باعث تونسہ بیراج سے نکلنے والی ڈی جی خان کینال جو کہ ڈیری غازی خان اور راجن پور کو سیراب کرتی ہے میں تین ہزار کیوسک پانی کی فراہمی شروع کردی ہے۔ تاہم شیئر میں کمی کے باعث مظفر گڑھ اور ٹی پی لنک کینال میں پانی کی فراہمی شروع نہیں ہو سکی ہے۔ دریں اثناء تربیلا ڈیم میں آبی قلت بدستور برقرار ہے تربیلا ڈیم میں پانی کی سطح 1374فٹ ہے جوکہ ڈیڈ لیول 1369فٹ سے صرف پانچ فٹ اوپر ہے۔ ڈیم میں پانی کی شدید کمی کے باعث تربیلا پاور ہاؤس کے بارہ یونٹ بند ہو گئے ہیں دو یونٹوں سے صرف 175میگا واٹ بجلی حاصل کی جارہی ہے جبکہ پیداواری صلاحیت3478میگا واٹ ہے۔ ادھر منگلا ڈیم میں پانی کے اخراج میں اضافہ کے باعث بجلی کی پیداوار میں بتدریج اضافہ ہو رہا ہے منگلا ڈیم میں پانی کی سطح 1107فٹ ریکارڈ کی گئی ہے جو کہ ڈیڈ لیول سے 1040فٹ سے67فٹ کی بلند سطح پر ہے۔ ڈیم میں31ہزار چار سو کیوسک پانی آرہا ہے اور 28ہزار کیوسک پانی چھوڑا جا رہا ہے قبل ازیں ڈیم سے صرف پانچ ہزار کیوسک پانی چھوڑا جا رہا تھا۔ منگلا ڈیم میں پانی کے اخراج میں اضافہ کے باعث منگلا پاور اسٹیشن کے آٹھ یونٹوں نے کام کرنا شروع کردیا ہے جن سے660میگا واٹ بجلی حاصل ہورہی ہے۔ تاہم دو یونٹ بند ہیں منگلا پاور اسٹیشن کی مجموعی جنریشن 1150میگا واٹ ہے۔ ادھر چشمہ نیو کلیئر پاور پلانٹ فنی خرابی کے باعث گذشتہ پندرہ روز سے بدستور بند ہے جس سے 325میگاواٹ بجلی کی فراہمی معطل ہے چینی انجیئنر چشمہ پاور پلانٹ کو چالو کرنے کیلئے شبانہ روز کوشاں ہیں۔ ذرائع کے مطابق آئندہ آٹھ روز میں چشمہ پاور پلانٹ بجلی کی فراہمی شروع کردے گا۔

01/04/2009 22:58:16 : وقت اشاعت
پچھلی خبر مركزی صفحہ اگلی خبر
تمام خبریں
یہ صفحہ اپنے احباب کو بھیجئیے
محفوظ کیجئے
پرنٹ کیجئے