بند کریں
شاعری عباس تابش

دی ہے وحشت تو یہ وحشت ہی مسلسل ہو جائے

-

di hai wehshat tu yeh wehshat hi musalsal ho jaye


(207) ووٹ وصول ہوئے