بند کریں
شاعری عادل بادشاہکرو تمام یہ اشکوں کی جو جھڑی ہے ابھی

(232) ووٹ وصول ہوئے