بند کریں
شاعری عادل بادشاہ

وفا کا چور کاسہ کر گیا ہے

-

wafa ka chor kasa kar giya hai


(234) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان