بند کریں
شاعری احمد مشتاقچاند بھی نکلا ستارے بھی برابر نکلے

(343) ووٹ وصول ہوئے