بند کریں
شاعری احمد مشتاقدلوں کی اور دھواں سا دکھائی دیتا ہے

(394) ووٹ وصول ہوئے