بند کریں
شاعری اعتبار ساجد

آنکھیں دیکھتی رہ جاتی ہیں

-

Aankhen dekhti reh


(213) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان