بند کریں
شاعری اعتبار ساجدکوئی بات کرنی ہے چاند سے

خلوتوں کا امیں گھر کہاں رہ گیا

-

Khalwtoon ka


(211) ووٹ وصول ہوئے