بند کریں
شاعری علی یاسر

خود اپنے اشکوں کا سیلاب مار دیتا ہے

-

khud apne ashkaooN ka


(255) ووٹ وصول ہوئے