بند کریں
شاعری علی یاسر

مستقل درد کی پوشاک پہن کر آئے

-

mustaqil dard ki poshaak


(239) ووٹ وصول ہوئے