بند کریں
شاعری امجد اسلام امجداتنے خواب کہاں رکھوں گا

ہم لوگ نہ تھے ایسے

-

Ham log na they aise


(246) ووٹ وصول ہوئے