بند کریں
شاعری امجد اسلام امجداتنے خواب کہاں رکھوں گا

سادہ سے اک چہرے پر

-

Sadda sa ek chehra


(297) ووٹ وصول ہوئے