بند کریں
شاعری اسداللہ خان غالب

نکتہ چیں ہے غم دل اس کو سنائے نہ بنے

-

Nukta chain hai

اسداللہ خان غالب

asadullah khan ghalib

(643) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان