بند کریں
شاعری عطاالحق قاسمیبھٹک رہی ہے عطا خلق بے اماں پھر سے

(221) ووٹ وصول ہوئے