بند کریں
شاعری عطا شادبڑا کٹھن ہے راستہ جو آسکو تو ساتھ دو

(210) ووٹ وصول ہوئے