بند کریں
شاعری ایوب خاوریوں سر شام تری یاد میں آنسو نکل آئے

(376) ووٹ وصول ہوئے