بند کریں
شاعری عزم بہزاد کہیں گویائی کے ہاتھوں سماعت رو رہی ہے

(46) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان