بند کریں
شاعری بقا بلوچ

عمر بھر کچھ خواب دل پر دستکیں دیتے رہے

-

ummar bhar kuch khawab


(247) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان