بند کریں
شاعری بشیر بدراللہ حافظ

کچھ نہیں اور تیرے سوا چاہیے

-

Kuch nehin aur


(222) ووٹ وصول ہوئے