بند کریں
شاعری باصر کاظمی

دور سایہ سا ہے کیا پھولوں میں

-

dorr saya sa hai kiya pholoon main


(288) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان