بند کریں
شاعری فیض احمد فیضنسخہ ہائے وفا

اب وہی حرف جنوں سب کی زباں ٹھہری ہے

-

Abb wohi harf e junoon


(254) ووٹ وصول ہوئے