بند کریں
شاعری فرحت عباس شاہبارشوں کے موسم میں

ہم نے اشکوں سے کبھی پوچھا نہ تھا

-

Ham ney ashkoon sey


(243) ووٹ وصول ہوئے