بند کریں
شاعری فرحت شہزادسنوارنا تو الگ ہے سنور سکو تو بہت

(337) ووٹ وصول ہوئے