بند کریں
شاعری فرحت شہزاد

وجہِ تاریکیٴ شب پھر شہِ خاور ٹھہرا

-

wajah e tareeki main shab phir shehkhawar thera


(247) ووٹ وصول ہوئے