بند کریں
شاعری فرحت زاہدعورت ہوں مگر صورتِ کہسار کھڑی ہوں

(22) ووٹ وصول ہوئے