بند کریں
شاعری فاطمہ اسد نقویابھی نکلی تھی آہِ سرد ہی اک میرے سینے سے

(212) ووٹ وصول ہوئے