بند کریں
شاعری فاطمہ اسد نقوی

ابھی نکلی تھی آہِ سرد ہی اک میرے سینے سے

-

abhi nikli thi aah e sard hi ik mere seene se


(212) ووٹ وصول ہوئے