بند کریں
شاعری فراق گورکھپوری

راہ دیکھ کر چلنے والوں

-

Raah dekh ker


(239) ووٹ وصول ہوئے