بند کریں
شاعری حمید کوثرنیازوناز کا پیکر نہ عرش پر ٹھہرا

(298) ووٹ وصول ہوئے