بند کریں
شاعری حسنین سحر

یہ ہم کہ بزمِ دہر میں ویسے تو کیا نہ تھے

-

yeh hum k bazam deher main waise tu kiya na the


(6) ووٹ وصول ہوئے