بند کریں
شاعری ابن انشا

اب نہ محمل نہ گرد محمل ہے

-

aab na mehmal na gird mehmal hai


(279) ووٹ وصول ہوئے