بند کریں
شاعری ابن انشادیکھ ہمارے ماتھے پر یہ دشت طلب کی دھول میاں

(299) ووٹ وصول ہوئے