بند کریں
شاعری ادریس بابر

خموش رہ کے زوالِ سخن کا غم کئے جائیں

-

khamosh reh k zawal e sukhan ka gham kiye jayeen

ادریس بابر

idris babur

(203) ووٹ وصول ہوئے