بند کریں
شاعری اقبال نوید

جو رستہ چن لیا اس کو بدلنا کیوں نہیں آیا

-

ju rasta chun liya uss ko badalna kiyon nahi aya


(179) ووٹ وصول ہوئے