بند کریں
شاعری عرفان صادق

سب کا تو ایک سا کردار نہیں ہوتا یار

-

sab ka tu aik sa kirdar nahi hota yaar


(227) ووٹ وصول ہوئے