بند کریں
شاعری عرفان صدیقیآج پھر تیر رگ جاں پہ گراں گزرا ہے

(257) ووٹ وصول ہوئے