بند کریں
شاعری عرفان صدیقی

دیر سے منظر افلاک صدا دیتا ہے

-

deer se manzir iflaak


(357) ووٹ وصول ہوئے