بند کریں
شاعری جمیل فاروقی

وہ بس اک بار میرے زخم جو دھوئے تو جیوں

-

wo bass ik baar mere zakhm ju dhoye tu jiyoon


(268) ووٹ وصول ہوئے