بند کریں
شاعری جوش ملیح آبادی

دوڑو کہ سر جوش نگوں سار ہو اہے

-

daauro , keh sar e josh nigoon


(247) ووٹ وصول ہوئے