بند کریں
شاعری کاشف کمال

سوچیں پاگل کر دیتی ہیں

-

sochain pagal kar deti hain


(383) ووٹ وصول ہوئے