بند کریں
شاعری کاشف کمال

تجھے منظر سے ہٹ کر دیکھتا ہوں

-

tujhe manzar se hatt kar dekhta hoon


(427) ووٹ وصول ہوئے