بند کریں
شاعری خالد احمد

دم سادھ کے دیکھوں تجھے جھپکوں نہ پلک بھی

-

dam-sadh-k-dekhooN-tujhe-jhapkooN-na-palkain-bhi


(229) ووٹ وصول ہوئے