بند کریں
شاعری کشور ناہید

ابھی موسم نہیں بدلا

-

abhi mosaam nahi badla


(347) ووٹ وصول ہوئے