بند کریں
شاعری میراجی

دیدئہ اشکبار ہے اپنا

-

dedah e ashkbar hai apna


(185) ووٹ وصول ہوئے