بند کریں
شاعری محبوب خزاںیہ جو ہم کبھی کبھی سوچتے ہیں رات کو

(265) ووٹ وصول ہوئے