بند کریں
شاعری میر تقی میرسبزانِ تازہ رَو کی جہاں جلوہ گاہ تھی

(335) ووٹ وصول ہوئے