بند کریں
شاعری مرزا محمد رفیع سودادیوان سودا

ہر سنگ میں شرار ہے تیرے ظہور کا

-

Har Sang main sharrar


(222) ووٹ وصول ہوئے